اردو شاعری کو دنیا سے روشناس کرانے کے لئے فلم میکر اور صحافی تبسم فاطمہ نے یو ٹیوب پر آبروئے غزل کی پہلی قسط لانچ کی

اردو کو گھر گھر پہچانا ہے اور یہ کام بہتر طریقے سے اردو شہری کر سکتے ہیں
دہلی (ایم این این عامر ظفر )
اردو شاعری کو ایک بڑی دنیا سے روشناس کرانے کے لئے فلم میکر اور صحافی تبسم فاطمہ اور فلم میکر اونیش راجوانشی نے یو ٹیوب پر آبروئے غزل کی پہلی قسط لانچ کی ہے ،شاہ حاتم ، مرزا جان جاناں ، ولی دکنی سے لے کر پروین شاکر تک جیسے شاعروں کو اس پروگرام میں جگہ دی جائے گی۔اردو غزلوں کے اس پروگرام میں اردو شاعری سے محبت کرنے والے اپنے محبوب شاعروں کا مکمل تعارف بھی حاصل کرینگے اور ملک کے مشہور سنگر کے ذریعہ گایی گیی غزلوں کا لطف بھی اٹھائیں گے، اردو غزلوں کی مقبولیت کو دیکھتے ہوئے جب ہم نے غزلوں پر منتخب پروگرام آبروئے غزل کی مارکیٹنگ کرانے کا ارادہ کیا تو امید نہیں تھی کہ کچھ اچھے نتیجے سامنے آئیں گے ،لیکن اس وقت ہماری حیرت کی انتہا نہیں رہی جب نتیجے امید سے کہیں زیادہ آئے .یہ اردوشاعری کی مقبولیت ہے .

صحافی ، ادیب اور پروڈیوسر ڈائرکٹر تبسم فاطمہ نے پروگرام کی لانچنگ کے بعد ملنے والی مقبولیت کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ غیر ممالک سے بھی پیغامات آنے کا سلسلہ شروع ہو چکا ہے .جو ہمارے اس تجربے کی مقبولیت کا ثبوت ہے .فلم مکر اونیش راجونشی نے اردو کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ اس شیریں زبان کو آج بھی کچھ لوگ مسلمانوں کی زبان کہہ کر اسکا دائرہ محدود کر دیتے ہیں .اس لئے پروگرام کے ساتھ ایسے پرومو بھی لانچ کیے گئے جس میں یہ بتانے کی کوشش کی گیی ہے کہ اردو پورے ہندوستان کی زبان ہے . راجونشی نے آگے بتایا کہ یہ پہلا پروگرام ہے جس میں مشکل الفاظ کے معنی بھی دیے گئے ہیں اور ساتھ ہی رومن اور ہندی میں ہر شعر کو صحیح تلفظ کے ساتھ بھی فوکس میں رکھا گیا ہے تاکہ کسی کو شعر کے مطلب سمجھنے میں دشواری نہ ہو .یہ تجربہ کامیاب رہتا ہے تو آئندہ نیی نسل کی شاعری کو بھی ہم پیش کرنے کا اہتمام کریں گے . آبروئے غزل پروگرام کے پینل بورڈ میں شامل مشہور ناول نگار اور ہالینڈ میں مقیم صفدر زیدی نے اس پروگرام کو ضروری قرار دیتے ہوئے کہا کہ آج کا زمانہ یو ٹیوب اور امیزن کا زمانہ ہے .اردو کی مقبولیت کے لئے ضروری ہے کہ ہم اردو کا دائرہ بڑا کریں . پروگرام کے ڈائریکٹر مشرف عالم ذوقی نے بتایا کہ اب یہ اردو شائقین پر ہے کہ وہ ہمارے پروگرام کو دیکھیں کیونکہ جلد ہی ہم اس پروگرام کو نیٹ فلیکس جیسے چینلوں پر بھی لانے کے بارے میں بات چیت کر رہے ہیں ..تبسم فاطمہ کے مطابق ، ہم نے ایک بڑا خواب دیکھا ہے ..اردو کو گھر گھر پہچانا ہے اور یہ کام بہتر طریقے سے اردو شہری کر سکتی ہے .یہ پروگرام یو ٹیوب کے لنکس پر دیکھا جا سکتا ہے ۔

======