راجن کے بیان سے کانگریس بے نقاب : اسمرتی ایرانی

نئی دہلی،  (یو این آئی) بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے نیشنل ہیرالڈ اور بینکوں کی غیر فعال سرمایہ (این پی اے) معاملے میں کانگریس پر حملہ تیز کرتے ہوئے منگل کو کہا کہ ریزرو بینک کے سابق گورنر رگھو رام راجن کے بیان سے کانگریس بے نقاب ہو گئی ہے اور وزیر اعظم نریندر مودی کو گلے لگانے میں کانگریس صدر راہل گاندھی کو کوئی گریز نہیں ہے تو انکم ٹیکس حکام سے ملنے سے کیوں بچ رہے ہیں ۔
مرکزی کپڑا کی وزیر اسمرتی ایرانی نے یہاں بی جے پی ہیڈ کوارٹر میں صحافیوں کو بتایا، ’’راجن نے انکشاف کیا ہے کہ کانگریس حکومت کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے ہی این پی اے بڑھا اور بینک خستہ حاال ہوا ۔ نیشنل ہیرالڈ معاملے میں دہلی ہائی کورٹ کی طرف سے متحدہ ترقی پسند اتحاد (یو پی اے) کی صدر سونیا گاندھی اور مسٹر گاندھی کی درخواست مسترد ہونے سے کانگریس ملک کے عوام کے سامنے بے نقاب ہو گئی ہے۔ 10 ستمبر کو، کانگریس اور اس کے رہنما کا اخلاقی بنیاد کا پردہ فاش ہوچکا ہے ۔
مرکزی وزیر نے الزام لگایا کہ مسٹر گاندھی، یو پی اے صدر اور ان کی بیٹی پرینکا واڈرا ٹیکس دہندگان کا پیسہ ہڑپنا چاہتی تھیں۔ لوک سبھا انتخابات میں مسٹر گاندھی کے خلاف انتخابی جنگ میں اترنے والی محترمہ ایرانی نے کانگریس کے صدر پر براہ راست حملہ کرتے ہوئے کہا، ’’نیشنل ہیرالڈ معاملے میں راہل گاندھی کو جواب دینا ہو گا‘‘۔