اردو خبریں خاص موضوع

اردو زبان کے حوالے سے ” سی وی” بھیجو” مترجمین کے لیے

 

sadaf Mirza
===============
تین سالہ پرانی ایک پوسٹ…. اور تین دن پرانی ایک کانفرنس
“اردو زبان کے حوالے سے ” سی وی” بھیجو”
مترجمین کے لیے…..
” عورتوں کی طرح سے مت رو”
یہ جملہ ایپک آف گلگامیش ” میں پہلی مرتبہ ریکارڈ ہوا. پھر محاورہ بن گیا
مسلم ہسپانیہ،
ہسپانیہ کی ۔۔۔۔ شاہزادیاں۔۔۔۔
اس کے لیے ۔۔۔
“عورتوں کی طرح
مت اشک بہا
جسے تو مردوں کی طرح
بچا نہ سکا “
عائشہ الحرۃ”
“ابك اليوم بكاء النساء على ملك لم تحفظه حفظ الرجال”
سپینش نام، ایکسا،. Aixa عائشہ ہی کے نام کی شکل ہے.
آج ہی ایک آن لائن لیکچر لسانیات اور تراجم کے حوالے سے تھا
اردو میں…. سپین کو
اسپین، اور ہسپانیہ، کے نام دینے کی وجہ لسانی طور پر کیا ہے؟
خیر وہ مباحث تو اگلے دوبرس تک چلیں گے،
افسوس اس بات کا ہے کہ علم کے پیاسوں نے مسلم ہسپانیہ پر ” شوکت ِ اسلاف” کے ترانے گانے والوں سے زیادی کام کر رکھا ہے
تھیوریاں باہر سے لا کر، مشرف بہ اسلام نہیں کی جا سکتیں
تراجم میں جب تک سرکاری سطح پر لسانی ماہرین سے کام نہیں کروایا جائے گا
تراجم غیر معیاری رہیں گے
روم اور فرانس کے ماہر لسانیات نے کئی دہائیوں تک یہ کام کیے.
لسانیات کے لیے پہلے تاریخ، جغرافیہ، مقامی بولیاں اور رواج کا طویل مطالعے کیے
پھر، ترجمے کی کتاب کی ذمہ داری اٹھائی
مسلم ہسپانیہ کے حکمرانوں کے نام، نسب، تاریخ انہیں یوں یاد تھے جیسے پیدائش کے لڈو کھا رکھے ہوں.
میں کونے پر لگی….. سکڑتے سکڑتے نکتہ بن گئی
کہ میرے پاس، اردو دانوں اور سرکاری اداروں کی فی الحال تک کوئی پالیسی نہیں ہے، اگر ہو تو دے کر ممنون کیجیے.
میرا پیپر ہسپانیہ کی مسلمان شاعرہ پر تھا، اس کے حوالے سے اللہ نے عزت رکھ لی.
مسجد قرطبہ، نظم کا حوالہ دیا، تو دو گھنٹے بعد پیشکش آئی.
اردو زبان کے حوالے سے اپنا سی وی بھیجیں اور نظم کا ترجمہ کر دیجیے.
الفاظ اور سطور کے حساب سے معاوضہ دیا جائے گا
سپینش لٹریچر ہاؤس میں دو ہفتے کی اعزازی رہائش بھی.
حقیقت یہ ہے کہ لینگویج، ٹرانسلیشن اینڈ کمیونیکیشن کے شعبے میں اپلائی کرتے ہوئے میں نے یہ کبھی سوچا بھی نہیں تھا
#صدف
جاری…
ہما پیاری،. معافی دئی دو

Facebook Comments