اردو خبریں بھارت

بھارتی کشمیرمیں سرکاری ملازم کشمیری پنڈت کے قتل کے خلاف احتجاج

بھارت کے زیر انتظام جموں و کشمیر کے کئی حصوں میں گزشتہ رات سے احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے، جہاں کشمیری پنڈت برادری سے تعلق رکھنے والے ایک 36 سالہ سرکاری ملازم کو رات کے وقت قتل کر دیا کیا گیا تھا۔ مظاہرین حکومت سے وادی میں کام کرنے والے پنڈت ملازمین کو تحفظ فراہم کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ قتل کے بعد پنڈت کمیونٹی کے ارکان اپنے ٹرانزٹ کیمپوں سے باہر نکل آئے اور سڑکوں کو جام کرنے کی کوشش کی۔ انہوں نے مرکز کی مودی حکومت اور حکمران جماعت بی جے پی کے خلاف بھی نعرے بازی کی۔ بھارتی کشمیر گزشتہ تقریبا تین برسوں سے مودی کی مرکزی حکومت کے زیر انتظام ہے۔ یہاں سخت سکیورٹی حصار ہے اور تمام طرح کی سیاسی سرگرمیوں اور احتجاجی مظاہروں پر پابندیاں عائد ہیں۔

Facebook Comments Box